‫عسکری بینک لمیٹڈ کی اپنے ڈیجیٹلائزیشن کے سفر کو تیز کرنے کے لیے SAS کے ساتھ شراکت داری

– بینک نے اپنے طریقہ کار میں شفافیت کو یقینی بنانے کے لیے SAS گورننس اینڈ کمپلائنس مینیجر (SAS GCM) سولیوشنز کو مؤثر بنایا ہے

– یہ سہولیات بینک کو اپنی خدمات کی افادیت کو اور ضوابط کی تعمیل کو بہتر بنانے کے قابل بنائیں گی

اسلام آباد، پاکستان، 25 مئی 2022/پی آر نیوز/ — پاکستان کے بینکاری کے ایک سرکردہ ادارے عسکری بینک لمیٹڈ نے انڈسٹری لیڈر SAS کے ساتھ اشتراک عمل کے ذریعے انضباطی تعمیل کو مضبوط بنانے کے لیے آٹومیشن کے ذریعے اپنے تعمیل اور خطرے سے نمٹنے کے طریقہ کار کو بہتر بنایا ہے۔ SAS سے گورننس اینڈ کمپلائنس مینیجر (SAS GCM) سالیوشنز کو استعمال کرتے ہوئے، بینک بدلتے ہوئے انضباطی لوازمات کا پر اعتماد انداز میں تدارک کرنے، کارکردگی میں زیادہ افادیت، اہلیت اور شفافیت کو یقینی بنانے کا ارادہ رکھتا ہے۔

عسکری بینک لمیٹڈ اور SAS کے درمیان اشتراک عمل کرانے میں ایک خطرے کا انتظام کرنے والی ایک سرکردہ خود مختار عالمگیر کنسلٹنسی The Risk Advisor (TRA) نے سہولت فراہم کی ہے، جو پاکستان میں پہلے سے وجود رکھتی ہے اور جو انٹیلیجنس، انویسٹی گیشن اور سیکورٹی کی خدمات مہیا کرتی ہے۔

عسکری بینک لمیٹڈ پاکستان کی کمرشل بینکاری سروس کی صنعت کی ضروریات کو پورا کرتا ہے۔ تقریبا 1.5 ملین (15 لاکھ) صارفین کے ساتھ، بینک سروس کے معیار، ٹیکنالوجی اور افراد میں سرمایہ کاری کو بہتر بنا کر افزائش پر توجہ مرکوز کرنا جاری رکھے ہوئے ہے۔ اپنی Q1FY22 کی رپورٹ میں، اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے ظاہر کیا کہ موبائل بینکاری صارفین 11.3 ملین کی مجموعی تعداد تک پہنچ گئے ہیں اور انٹرنیٹ بینکاری کے صارفین نے 30 ملین کی ٹرانزیکشنز انجام دیں، جن کی مالیت تقریبا 1.9 ٹریلن روپے تک رہی۔ جبکہ صارفین بینکاری سروسز کی ڈیجیٹائزیشن کے ساتھ زیادہ سے زیادہ آرام دہ محسوس کر رہے ہیں جس سے نئے ضوابط بن رہے ہیں، بینک اپنے آپریشنل خطرے اور تعمیلی ماحول بطور خاص انٹرپرائز تعمیل اور خطرے کے انتظام کے شعبے میں شفافیت کے حصول کے چیلنج پر قابو پانے اور قیادت کو زیادہ سے زیادہ مرئیت پیش کرنے کے لئے پر عزم ہے۔ اس بات کو یقینی بنانے کے لیے کہ ٹیم کے ارکان میں زیادہ اشتراک عمل ہو اور وہ مربوط ہوں، ایک پلیٹ فارم کے ذریعے طریقہ کار کو سٹریم لائن کرنا ایک اور ترجیح ہے جو کام کے بہاؤ، ریکارڈ، پھیلاؤ، پیروی کرنے کے عوامل کو خودکار بنا سکے اور نتائج کو مجتمع کر سکے۔

عسکری بینک میں چیف کمپلائنس افسر اور تعمیلی ڈویژن کے سربراہ سید علی رضا زیدی نے کہا، “ہم سمجھتے ہیں کہ ملازم، صارف اور ریگولیٹر کی توقعات کو پورا کرنے اور ان کا انتظام کرنے کے لیے آٹومیشن آج کے دور کی ایک ضرورت ہے۔ ڈیجیٹائزیشن ہمارے لیے ایک ترجیح بن گئی ہے اور بینک اس شعبے میں تسلسل کے ساتھ سرمایہ کاری کر رہا ہے۔ انتہائی اہم امور میں سے ایک اپنے طریقہ کار میں آٹومیشن کے ذریعے مسلسل بہتری لانا ہے، جہاں ممکن ہو اور اپنی آؤٹ پٹ میں اضافہ کرنا ہے۔  کیونکہ اس مقصد کے حصول میں اشتراک عمل کلیدی حیثیت رکھتا ہے، ہمیں درکار مرئیت اور اس کے مطابق کاروائی کرنے کے لیے ٹیکنالوجی کی سہولیات جو ہمارے طریقہ کار اور ضوابط کے سے ہم آہنگ ہوں بھی اتنی ہی اہمیت کی حامل ہیں۔ اس چیلنج کو امکان میں بدلنے کے لیے SAS جیسا ٹیکنالوجی شراکت دار رکھنا بھی ضروری ہے تاکہ ہم زیادہ مؤثر انداز میں کام کر سکیں۔”

SAS گورننس اینڈ کمپلائنس مینیجر (SAS GCM) سولیوشنز بینکوں کے اندر خطرے اور تعمیل کے بارے میں آگاہی کی روایت پیدا کرنے کے لیے تیار کیے گئے ہیں۔ SAS ایسی سہولیات بھی فراہم کرتا ہے جن میں اثاثہ جات اور ذمہ داری کا تعین کرنے کا انتظام، کریڈٹ خطرے کا انتظام، خطرے سے نمٹنا، بیمہ میں خطرے کا انتظام اور کاروباری آپریشنز کے اندر مواقع اور چیلنجوں کی شناخت کرنے کے لیے منظرنامے کی بنیاد پر تجزیہ کا امتزاج شامل ہے۔ یہ تمام سہولیات بینکوں کو اپنے خطرے اور تعمیلی طریقہ کار کو صحیح تناظر میں دیکھنے میں مدد دینے کے لیے مل کر کام کرتی ہیں۔

“SAS میں، ہم سمجھتے ہیں کہ کمپنیوں کے لیے ترقی پذیر ٹیکنالوجی اور ضوابط کی متحرک نوعیت سے ہم آہنگ رہنا ضروری ہے۔ خطرے سے نمٹنے کی ہماری سہولیات ان ہی مقاصد کو پورا کرنے کے لیے تیار کی گئی ہیں۔ SAS میں پروفیشنل سروسز ڈائریکٹر، برائے متحدہ عرب امارت اور ابھرتے ہوئے مشرق وسطیٰ، باسم بوسالی نے کہا، “طریقہ کار اور تجزیات بھر میں شفافیت کی پیشکش کرنے سے لیکر آپریشنز اور بصیرت پر مبنی فیصلوں کی زیادہ واضح تصویر پیش کرنے تک، ہم یہ یقینی بنانے میں کمپنیوں کی مدد کرنے کے ایسے تجربے اور صلاحیت کے حامل ہیں کہ وہ ان سہولیات کو اپنے اسٹیک ہولڈرز کے فائدے کے لیے استعمال کر سکیں۔

Fukuoka City Announces Fukuoka Prize 2022 Laureates

FUKUOKA, Japan, May 26, 2022 /Kyodo JBN/ — Fukuoka City (Secretariat of Fukuoka Prize Committee) on May 26 announced the laureates for the Fukuoka Prize 2022. The Grand Prize has been awarded to Mr. HAYASHI Eitetsu, a taiko drummer who has been constantly at the forefront of creative interpretations of taiko music. The Academic Prize has been awarded to Professor Timon SCREECH, an art historian specializing in the Edo period. Ms. Shahzia SIKANDER, an artist from Pakistan who represents South Asia, has won the Arts and Culture Prize.

Grand Prize: Mr. HAYASHI Eitetsu (Japan / Taiko Drummer)
https://kyodonewsprwire.jp/prwfile/release/M100886/202205191422/_prw_PI4fl_WXW4Ybyu.jpg

Academic Prize: Prof. Timon SCREECH (U.K. / Art Historian)
https://kyodonewsprwire.jp/prwfile/release/M100886/202205191422/_prw_PI5fl_IJxLs80A.jpg

Arts and Culture Prize: Ms. Shahzia SIKANDER (U.S.A. / Artist)
https://kyodonewsprwire.jp/prwfile/release/M100886/202205191422/_prw_PI6fl_64hCT1ls.jpg

The Award Ceremony will be held and live-streamed on Tuesday, September 27, 2022. An archived recording will be available after the event. Mr. Hayashi Eitetsu and Prof. Timon Screech will give public lectures on Wednesday, September 28, and Ms. Shahzia Sikander’s lecture is scheduled for Friday, September 30. These lectures will be held with an audience in attendance, and archived recordings will be available online at a later date. (Available for viewing from abroad.)

About the Fukuoka Prize

The Fukuoka Prize is awarded annually to honor the outstanding achievements of individuals, groups and organizations in the field of research, arts and culture. The prize was established in 1990 by Fukuoka City, which has played a significant role as Japan’s gateway for exchanges with the rest of the Asian region since ancient times. The prize aims to foster and increase awareness of the value of Asian cultures, and to establish a foundation from which the people of Asia can learn and share with one another.

The prize has so far been presented to 118 leaders in their respective fields. Past laureates include Professor Muhammad YUNUS from Bangladesh, who also received the Nobel Peace Prize; and Dr. NAKAMURA Tetsu from Japan, who took the lead in medical services, land reclamation and social welfare for the sick and vulnerable in Pakistan and Afghanistan.

Bookings for the official events will be open from Monday, August 1. *Advance bookings are compulsory.

Fukuoka Prize official website: https://fukuoka-prize.org/en/

 

Source: Fukuoka City (Secretariat of Fukuoka Prize Committee)

Nation has completely rejected PTI’s so-called March: Marriyum

Minister for Information and Broadcasting Marriyum Aurangzeb says nation has completely rejected today the so-called March of Pakistan Tehreek-e-Insaf, and expressed full confidence in the government.

Addressing a news conference in Islamabad on Wednesday, she said that the nation witnessed huge unemployed and inflation during the tenure of Imran Khan as Prime Minister.

She said the former Prime Minister leveled baseless corruption allegations but couldnot prove anyone of them.

Talking about life imprisonment of Hurriyat Leader Yasin Malik announced by the India Court, she said the government and people of Pakistan strongly condemn the move.

The Minister called upon international community to take serious of the issue as India is committing serious human rights violations in Indian Illegally Occupied Jammu and Kashmir including lodging fake and baseless cases against Hurriyat leaders.

Marriyum Aurangzeb said that government will celebrate Yaume-e-Takbeer on 28th of this month with an enthusiasm and fervor and day of journey of development.

Source: Radio Pakistan

Govt to ensure everlasting development in next financial year: KP CM

Chief Minister Khyber Pakhtunkhwa Mahmood Khan says the provincial government is going to present the biggest historical budget for the upcoming financial year to ensure everlasting development.

Presiding over a meeting in Peshawar, he directed all the administrative secretaries to present their key proposals about development projects for inclusion in the budget.

Mahmood Khan said ninety percent funds will be allocated in the budget to complete the ongoing uplift projects on priority basis.

He said special focus will be given on education, health, energy, tourism, social welfare and irrigation sectors to modernize them.

The Chief Minister emphasized over mid, long and short term planning to overcome the shortage of educational institutions.

Source: Radio Pakistan

Sindh Govt asks owners of tax defaulting vehicles to deposit taxes as soon as possible

Provincial Minister for Excise, Taxation and Narcotics Control Department Mukesh Kumar Chawla has said that the campaign to collect tax from tax defaulting vehicle owners would continue till June 3.

In a statement, he requested the owners of tax defaulting vehicles to deposit their taxes as soon as possible.

Meanwhile, the authorities have collected a total of over 252 million rupees in taxes from defaulting vehicle owners across the province.

Source: Radio Pakistan